Sunday, April 21, 2024
الرئيسيةNewsآلودگی کی وجہ سے دہلی میں پرائمری اسکولوں میں چھٹی

آلودگی کی وجہ سے دہلی میں پرائمری اسکولوں میں چھٹی

وزیر اعلیٰ کجریوال نے کہا – آلودگی کی صورتحال بہتر ہونے تک پرائمری اسکول بند رہیں گے

نئی دہلی، 04 اکتوبر  ۔

دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے بڑھتی ہوئی آلودگی کی وجہ سے دہلی میں پرائمری اسکولوں کو بند کرنے کا اعلان کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دہلی میں آلودگی کی صورتحال بہتر ہونے تک پرائمری اسکول بند رہیں گے۔ انہوں نے کہا کہ گاڑیوں کے چلانے کے لیے طاق-جفت اسکیم پر غور کیا جا رہا ہے۔

وزیر اعلی کیجریوال نے جمعہ کو پنجاب کے وزیر اعلی بھگونت مان کے ساتھ ایک مشترکہ پریس کانفرنس میں اس فیصلے کی جانکاری دی۔ انہوں نے کہا کہ یہ وقت سیاست کرنے کا نہیں اور نہ ہی ایک دوسرے پر الزامات لگانے کا ہے۔ مرکز کو آگے آکر قدم اٹھانے ہوں گے تاکہ شمالی ہندوستان کو آلودگی سے بچایا جاسکے۔

انہوں نے پریس کانفرنس کے اختتام پر اعلان کیا کہ دہلی میں پرائمری اسکول کل یعنی ہفتہ سے بند رہیں گے۔ طاق کے نظام کو نافذ کرنے یا نہ کرنے پر غور کیا جا رہا ہے۔ اس کے ساتھ ہی وزیر اعلیٰ نے دہلی ریاستی بی جے پی کے صدر آدیش گپتا کو یقین دلایا کہ ان کا پوتا آلودگی کی وجہ سے پریشان ہے اور انہیں یقین دلایا کہ حکومت اس مسئلے سے نمٹنے کے لیے ہر ممکن کوشش کرے گی۔

کیجریوال نے کہا، آدیش گپتا جی نے کہا کہ ان کا پوتا تکلیف میں ہے۔ ان کا پوتا بھی میرا پوتا ہے۔ میں آپ کو یقین دلاتا ہوں کہ ہم مل کر کوشش کریں گے کہ کسی بچے کو تکلیف نہ پہنچے۔

اس کے جواب میں دہلی ریاستی بی جے پی صدر نے وزیر اعلیٰ کا شکریہ ادا کیا ہے۔ انہوں نے کہا، ”یہ صرف میرے پوتے کے لیے نہیں ہے، ہمیں دہلی کے ہر بچے کی صحت کو ذہن میں رکھتے ہوئے اس زہریلے آلودگی سے جلد چھٹکارا پانے کے لیے مستقل اقدامات کرنے ہوں گے۔“

قابل ذکر ہے کہ دہلی میں آلودگی مسلسل بڑھ رہی ہے۔ جس کی وجہ سے لوگوں کو کافی مشکلات کا سامنا ہے۔ دہلی میںاے کیو آئی 450 سے زیادہ ہے جسے نقصان دہ کے طور پر درجہ بندی کیا گیا ہے۔ بی جے پی کے ریاستی صدر آدیش گپتا اور قومی ترجمان شہزاد پونا والا نے فضائی آلودگی کی بڑھتی ہوئی سطح اور تشویشناک صورت حال کو لے کر صبح پریس کانفرنس کی۔ اس میں انہوں نے نہ صرف دہلی کے وزیر اعلیٰ کیجریوال کو ذمہ دار ٹھہرایا بلکہ اسے دہلی حکومت کی ناکامی بھی قرار دیا۔ اسی دوران گپتا نے اپنے پوتے کابھی ذکر کیا ۔

RELATED ARTICLES

ترك الرد

من فضلك ادخل تعليقك
من فضلك ادخل اسمك هنا

Most Popular

Recent Comments