Monday, February 26, 2024
الرئيسيةUncategorizedمہاراشٹر میں بچہ چور سمجھ کر سادھوو ں پر بہیمانہ حملہ

مہاراشٹر میں بچہ چور سمجھ کر سادھوو ں پر بہیمانہ حملہ

ممبئی، 14 ستمبر (ہ س)۔

سانگلی ضلع کی جت تحصیل کے لونگے گاو¿ں میں اتر پردیش کے 4 سادھوو¿ں کو بے رحمیسے پٹائی کا واقعہ سامنے آنے کے بعد مہاراشٹر کے ڈائریکٹر جنرل آف پولیس (ڈی جی پی) رجنیش سیٹھ نے سانگلی کے سپرنٹنڈنٹ آف پولیس (ایس پی) کو واقعے کی مکمل رپورٹ دینے کا حکم دیا ہے۔ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے ترجمان رام کدم نے کہا کہ پالگھر میں سادھوو¿ں کے قتل کے واقعہ کو ریاست میں دہرانے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ واقعے کی تحقیقات کا حکم دے دیا گیا ہے۔

سانگلی کے ایس پی دکشت کمار گیدام نے بتایا کہ اتر پردیش میں رہنے والے چار متعلقہ سادھو درشن کے لیے بیجاپور سے پنڈھار پور جا رہے تھے۔ یہاں کے مقامی لوگ ان کی زبان نہیں سمجھ سکتے تھے اس لیے وہ انہیں بچہ چور سمجھ کر مارا پیٹا۔ تاہم اطلاع ملتے ہی پولیس موقع پر پہنچ گئی اور زخمی سادھو کا علاج کرایا۔ اس کے بعد چاروں سادھو چلے گئے۔ معاملے کی جانچ جاری ہے۔

پولیس کے مطابق سادھوو¿ں کو بھیڑ نے زبان نہ سمجھنے کی وجہ سے مارا پیٹا، پولیس نے انہیں فوری طور پر بھیڑ سے بچایا اور ان کا علاج کروایا، لیکن وہ شکایت درج کرائے بغیر چلے گئے۔ شکایت موصول نہ ہونے کی وجہ سے پولیس نے اس معاملے میں کوئی کارروائی نہیں کی۔ ضلع کے ایس پی نے کہا ہے کہ وہ معاملے کی دوبارہ جانچ کر کے رپورٹ دیں گے۔

معلومات کے مطابق، بیجاپور سے پنڈھار پور جا رہے چار سادھو اتوار کو جت تحصیل کے لونگے گاو¿ں میں ٹھہرے ہوئے تھے۔ پیر کی صبح ان سادھوو¿ں نے ایک بچے کو بلایا اور راستہ پوچھنے لگے، اسی وقت گاو¿ں والوں کو سادھوو¿ں پر بچے کو اغوا کرنے کا شک ہوا۔ اس وجہ سے گاو¿ں والوں نے مل کر سادھوو¿ں کی پٹائی کی۔

واقعہ کی اطلاع ملتے ہی پولیس موقع پر پہنچی اور سادھوو¿ں کو بچا کر تھانے لے آئی۔ اس کے بعد سادھوو¿ں کا علاج کیا گیا اور منگل کو تمام سادھو اپنی منزل کی طرف روانہ ہوگئے۔ لیکن بدھ کو سادھوو¿ں کی پٹائی کا ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہا ہے۔ اس وجہ سے اس معاملے میں ریاست کے ڈی جی پی نے فوری طور پر واقعہ کی تفصیلی رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیا ہے۔

مہاراشٹر میں سادھوو¿ں پر حملے کا یہ پہلا واقعہ نہیں ہے۔ 2020 میں، مہاراشٹر کے پالگھر ضلع کے گڑھ چنچلے گاو¿ں میں دو سادھوو¿ں کو ہجوم نے بے دردی سے پیٹا، جس میں دونوں سادھو مارے گئے۔وہ مر چکی تھی۔ دونوں سادھو سورت جا رہے تھے۔ پالگھر میں دو سال پہلے سادھوو¿ں کے قتل کا واقعہ ہوتے ہوتے بچ گیا۔

رام کدم نے کہا کہ مہاراشٹرا سنتوں اورسادھوو¿ں کی سرزمین ہے۔ جو غلطی پچھلی حکومت نے کی تھی، وہ غلطی اس حکومت کے دور میں کسی قیمت پر نہیں ہونے دی جائے گی۔ ریاست میں سنتوں کے مناسب احترام کو ترجیح دی جائے گی۔

 

RELATED ARTICLES

ترك الرد

من فضلك ادخل تعليقك
من فضلك ادخل اسمك هنا

Most Popular

Recent Comments